اتوار 06 دسمبر 2020


دھرتی نیوز کے بلاگ سیکشن میں خوش آمدید!!!!

یہاں پر آپ پاکستان کے نامور بلاگرز، لکھاریوں، کالم نگاروں اور دیگر مصنفین کے لکھے بلاگز پڑھ سکتے ہیں۔ حالاتِ حاضرہ، تاریخ، ادب، ثقافت، معاشرت، معیشت، صحت، اور سیاحت سمیت تمام شعبہ ہائے زندگی اور مکتبہ ہائے فکر سے متعلقہ بلاگ آپ کو ایک ہی جگہ پر پڑھنے کو ملیں گے۔ دھرتی نیوز کی جانب سے کوشش کی گئی ہے کہ کسی ایک موضوع پر مختلف نکتہ ہائے نظر رکھنے والے بلاگرز کو نمایاں جگہ دی جائے۔ اور اس موضوع پر ہر دو قسم کی آراء پر مشتمل بلاگ قارئین کو پڑھنے کو ملیں۔ دلچسپ طرزِ تحریر سے مزین بلاگز جن سے آپ کو بہت کچھ سیکھنے کو ملے گا۔ سوچ کے در وا کرتی تحاریر جو آپ کو روزمرہ زندگی کے بہت سارے مسائل سے آگاہ اور ان کا حل تجویز کریں گی۔ 
طنزو مزاح پر مشتمل بلاگ جو آپ کے ہونٹوں پر مسکراہٹ بکھیر دیں۔ 
دانش و حکمت سے بھرے بلاگ جو آپ کو بہت کچھ سوچنے پر مجبور کر دیں۔ 
بلاگ ایک ایسی صنف ہے جس نے اکیسویں صدی میں کالم اور تفصیلی مضامین کی جگہ حاصل کر لی ہے۔ دھرتی نیوز کا بلاگ سیکشن اس صنف میں لکھے تمام منفرد بلاگز آپ تک پہنچا رہا ہے۔ 
قارئین کو آگاہ کرتے چلیں کہ یہاں پر موجود بلاگز خالصتاً بلاگرز کی ذاتی آراء پر مشتمل ہیں۔ بلاگرز کی جانب سے موصول یا شائع ہونے والے بلاگز کو سیکشن پر بعینٖہ اپلوڈ کر دیا جاتا ہے۔ ادارے کا کسی بلاگر کی رائے سے متفق ہونا ضروری نہیں۔ نہ ہی یہ سمجھا جائے کہ بلاگرز کا لکھا ادارے کی پالیسی کی ترجمانی کرتا ہے۔ اس حوالے سے ہم کسی قسم کی ذمہ داری سے مبرا ہیں۔ اگر کسی مخصوص بلاگ کی وجہ سے دھرتی نیوز کے کسی قاری کی دل آزاری ہو تو پیشگی معذرت کرتے ہوئے یہ درخواست کریں گے کہ آپ درج ذیل ای میل کے ذریعے انتظامیہ کو آگاہ کیجیے۔ بلاگ میں متنازعہ مواد کی تصدیق ہونے کی صورت میں اسے سائٹ سے ہٹا دیا جائے گا۔ 


یہ ہر کھیل کی خاصیت ہے کہ اس میں کسی خاص دور میں بہترین کارکردگی دکھانے والے کھلاڑیوں کو ایک الگ مقام حاصل ہوتا ہے، اور ایسا ہی کچھ کرکٹ کے کھیل میں بھی ہوتا آرہا ہے۔ 80ء کی دہائی کے دوران دنیائے کرکٹ پر 4 آل راؤنڈرز چھائے ہوئے تھے اور انہیں ایک خاص مقام حاصل تھا۔
11 گھنٹے پہلے

آپ نے اکثر کوڑا چننے والے بچوں کو دیکھا ہوگا کہ وہ کوڑا اٹھائے ہوئے مختلف پھل یا دوسری چیزیں کھا رہے ہوتے ہیں۔ ان میں سے بعض تو کوڑے میں سے کھانے پینے کی اشیاء بھی چن کر گھر لے جاتے ہیں جبکہ ان کے چہرے عام بندوں کی نسبت زیادہ ہشاش بشاش اور تںدرست نظر آتے ہیں۔
16 گھنٹے پہلے

پرانے پاکستان میں جی ڈی پی 5 اعشاریہ 8 فیصد تھا، نئے پاکستان میں 2019 کے دوران ایک اعشاریہ 90 فیصد تک گر گیا اور امسال کے لیے منفی صفر اعشاریہ چالیس تک گرنے کا امکان ہے، جی ڈی پی کی یہ گرتی ہوئی شرح روز پکار رہی ہے کہ روک سکتے ہو تو روک لو لیکن کوئی روکنے والا نہیں۔
17 گھنٹے پہلے

مجھے کبھی کبھی لکھتے ہوئے ساری ساری رات گزر جاتی ہے اور لکھتے ہوئے میرے آنسو میرے باطن پہ گرتے ہیں یہ آنسو نظر تو نہیں آتے لیکن انسان کو اندر سے دیمک کی طرح ایک دن ختم کر دیتے ہیں اس آگہی کا کوئی نام نہیں ہوتا لیکن جب میں کہی دور صحراؤں بیابانوں میں تنہا کھڑے ہو کر اپنے معاشرے کی گرد نظر دوڑاتی ہوں تو مجھے پرنور چہروں میں بھیانک چہرے نظر آتے ہیں۔ ایک کائنات انسان کے باطن میں ہوتی ہے جو ہماری خود کی تخلیق کردہ ہے اور دوسری باطن سے پرے ہوتی ہے۔
1 دن پہلے

سردی کے موسم میں گیس کی طلب میں بہت زیادہ اضافہ ہوجاتا ہے اور سردی کے موسم میں گیس کی قلت کا سامنا ہوتا ہے۔ اس لیے دسمبر، جنوری اور فروری کے مہینوں کے لیے گیس درآمد کرنے کے انتظامات کئی مہینے پہلے ہی کرلیے جاتے ہیں۔ اگر پہلے ہی یہ انتظامات نہ کیے جائیں تو اس کا مطلب ہے کہ بعد میں مہنگے داموں گیس خریدنی پڑے گی، اور یہاں بالکل ایس ہی ہوا ہے۔
1 دن پہلے

2020 بھی عجیب سال ہے، اِس سال نے دنیا بدل کر رکھ دی ہے، معاشرتی فاصلے قائم کرنے والے اِس ایک سال کو خوف سے لبریز سال کے طور پر یاد کیا جائے گا، کورونا جیسے وبائی مرض کے باعث دنیا پریشان ہے، یہ مرض پندرہ لاکھ سے زائد افراد نگل چکا ہے۔
1 دن پہلے

نیا کو معلوم ہے کہ بھارت، پاکستان کا کھلا دشمن ہے۔ پاکستان کی طرف سے متعدد بار اچھے پڑوسیوں کی طرح امن و سلامتی سے رہنے اور خیرسگالی کے اظہار اور پیغامات کا اظہار کیا گیا۔ لیکن بدقسمتی سے بھارت نے ایسی کوششوں پر کبھی مثبت اظہار نہیں
1 دن پہلے

اردو محاورہ ہے کہ فلاں شخص پڑھا لکھا نہیں ۔ اس محاورے کی ترتیب میں خیال رکھا جاتا ہے کہ پہلے لفظ پڑھا لایا جاتا ہے اور بعد میں لکھا۔
2 دن پہلے

ہم آہستہ آہستہ اس گلی میں چل رہے تھے۔ تیزی سے چلنا یقیناً ان کاریگروں کی توہین تھی جنہوں نے نہایت مہارت کے ساتھ ہزار برس سے زائد قدیم شہر کو اس کی روائتی شکل میں بحال کردیا تھا
2 دن پہلے

حکومت کے وزیر اور مشیر بی بی سی کے ایک صحافی سٹیفن سیکر سےبڑے خوش نظر آتے ہیں کیونکہ ان کے خیال میں اس برطانوی صحافی نے اپنے پروگرام ’’ہارڈ ٹاک ‘‘ میں پاکستان کے سابق وزیر خزانہ اسحاق ڈار کو کلین بولڈکردیا ۔
2 دن پہلے



Welcome to the Blog section of Dharti News. Here you can read Urdu blogs written by various popular bloggers of Pakistan and from around the world. The blogs written on current affairs, economy, social Anthropology, heritage, health, culture and tourism etc are included in this section. You will learn lots of new things and will come aware a out different aspects of life.

Blog is relatively new kind of writing and very popular now a days. It has replaced the importance of columns and research articles. Readers want to read the blogs of their favorite bloggers. If you are lover of blogs than you are at right place. Welcome to Dharti blog.

Declaimer: Dharti News is not responsible of any of the views represented by bloggers in their blogs. All the views presented in the blogs belong to the respective blogger. Dharti News doesn't take responsibility. However if you find any piece of writing controversial, plz email us on following address. We will check it as soon as possible and will remove the blog from section if controversial content is found in blog.

[email protected]