اتوار 06 دسمبر 2020


جہانِ دھرتی سے جُڑی کہانیاں، ان گنت افسانے، داستانیں، قصے اور واقعات کی بھول بھلیاں جو آپ کو مسحور کر کے رکھ دیں۔ 

دھرتی کے "اردو کہانیاں" سیکشن میں خوش آمدید۔ یہاں آپ کو وہ سب کچھ ملے گا جو آپ پڑھنا چاہتے ہیں۔ وقت کا بہترین مصرف، اردو ادب کے بہترین کہانی کاروں اور نوجوان افسانہ نگاروں کی مختصر، طویل اور سلسلہ وار کہانیاں اس سیکشن میں موجود ہیں۔ اس کے علاوہ دھرتی نیوز کی جانب سے بین الاقوامی ادب کا اردو ترجمہ بھی گاہے گاہے پیش کیا جاتا رہے گا۔ اگر آپ کسی مصنف کی کہانی پڑھنا چاہتے ہیں جو یہاں موجود نہیں تو نیچے دیے گئے ای میل پر رابطہ کیجیے۔ 

[email protected]


ماوٴنٹ واشنگٹن نامی پہاڑی چوٹی ریاست ہائے متحدہ امریکہ کے شمال مشرقی علاقے نیو ہیپمشائر کی بلند ترین چوٹی ہے ۔کسی زمانے میں یہاں کے رہنے والے اسے ہوم آف دی گریٹ اسپرٹ یعنی عظیم روح کا گھر کہکر پکارتے تھے ۔
19 گھنٹے پہلے

ایک دفعہ کا ذکر ہے کہ چاندنیچاندنی رات میں ایک دبلے پتلے،سوکھے مارے بھوکے بھیڑیے کی ایک خوب کھائے پیئے،موٹے تازے کتے سے ملاقات ہوئی۔دعا سلام کے بعد بھیڑیے نے اس سے پوچھا،”اے دوست !تُو تو خوب تروتازہ دکھائی دیتاہے۔
1 دن پہلے

ارشد اور امجد دو بھائی تھے دونوں اپنے ماں باپ کے ساتھ گاؤں میں رہتے تھے۔اگر چہ وہ غریب تھے لیکن وقت اچھا گزر رہا تھا غربت کے باوجود ماں اپنے بچوں کا بہت خیال رکھتی تھی اس کی کوشش ہوتی تھی کہ وہ اپنے بچوں کو صاف ستھرے اچھے کپڑے پہنائے اور اچھا کھانا کھلائے۔
2 دن پہلے

دو بھائی تھے۔ایک امیر تھا ایک غریب تھا۔امیر کا نام امیروف اور غریب کا نام سلیموف۔دونوں میں بنتی نہیں تھی۔بات یہ تھی کہ امیروف سلیموف کو پسند نہیں کرتا تھا۔ایک دن سلیموف کو ضرورت پڑی تو اس نے کچھ دیر کے لئے بڑے بھائی سے گھوڑا مانگا۔
3 دن پہلے

یورپ کے قیام کے زمانے کی بات ہے․․․․میں لندن میں اپنی سہیلی کے پاس ٹھہری ہوئی تھی․․․․ایک روز مجھ سے کہنے لگی کہ”آؤ تمہیں جنگل کی سیر کرواتی ہوں۔“
2020-12-01

دولت آبادملک میں ایک بادشاہ حکومت کرتا تھا۔ وہ بڑا رحم دل اوررعایا پرور تھا۔ جو بھی اس کی پاس آتا وہ اسے ضرور کچھ نہ کچھ دے کر رخصت کرتا۔ اگر کسی کو کوئی پریشانی ہوتی تو راجا خود اس کو حل کرنے کی کوشش کرتا۔ غریبوں اور مجبوروں کا بہت خیال رکھتا۔
2020-12-01

امی ! میں نے سلمان صاحب سے بات کرلی ہے ۔ وہ مجھے ملازم رکھنے پر راضی ہوگئے ہیں۔ پندرہ سالہ حسام خوشی خوشی اپنی امی کو بتارہا تھا حسام کی والدہ اس سے کام کروانا نہیں چاہتیں تھیں، مگر مجبوری ہی کچھ ایسی تھی ، وہ بے دلی سے مسکرادیں والد کے انتقال کے بعد حالات نے وقت سے پہلے ہی حسام کو سمجھ دار بنادیا تھا
2020-11-30

ایک مرتبہ کاذکر ہے کہ ایک ملاح تھا ،دریا کے کنارے اس کا خوبصورت سا مکان تھا۔اس کے پاس ایک نہایت ذہین طوطا تھا،وہ نہ صرف خوبصورت تھا بلکہ لوگوں کو ان کی پریشانیوں کا حل بھی بتاتا تھا۔اس کی شہرت دور دور تک پھیل گئی تھی۔
2020-11-29

سمندر کی گہرائی اپنے اندر کئی پر اسرار اور خوفناک راز چھپائے ہوئے ہیں جبکہ زمین پر موجود سائنسدان صدیاں گزرنے کے باوجود بھی ان سے پردہ اٹھا نہیں پائے۔تاہم ایک حقیقت یہ بھی ہے کہ زمین کا تو ایک بہت بڑا حصہ دریافت کیا جا چکا ہے جبکہ اب تک سمندر کا جتنا بھی حصہ دریافت کیا گیا ہے وہ 5فیصد سے بھی کم ہے ۔
2020-11-29

وہ دن میاں بلاقی کیلئے انتہائی حیرت انگیز تھا۔ صبح کے وقت وہ اپنی بگھی کا پہیا ٹھیک کررہا تھا کہ کسی نے اس کا کندھا ہلایا۔ اس نے گھوم کر دیکھا تو بڑے سے سر والا ایک بونا آدمی کھڑا تھا۔ وہ بولا: ”مجھے میاں بلاقی کی تلاش ہے۔
2020-11-27



Stories in Urdu - Urdu Kahaniyan

Welcome to the world of stories. You can read different types of Urdu stories from around the world here. We will post short Urdu stories, long Urdu stories and serial Urdu stories here on regular basis. You can find the Urdu translation of foreign litterateur also. Urdu stories written by various Urdu writers are posted here. If you miss any writer or want to read some specific type of Urdu story or writer, feel free to ask us on given email. 

[email protected]

Enjoy reading Urdu stories.