ھفتہ 19 ستمبر 2020

اسپین حکومت کا واٹس ایپ پر سروس ٹیکس لگانے کا فیصلہ

Riyadh: The Saudi Department of Zakat and Income says that value added tax on camel and cattle transactions will be collected under certain conditions / Dharti News
فوٹو : رائٹرز

میڈریڈ، اسپین کی حکومت نے واٹس ایپ سمیت دیگر پیغام رسانی کی سہولت فراہم کرنے والی کمپنیز پرسروس ٹیکس لگانے کا فیصلہ کرلیا۔

خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق حکومت کے سینئر عہدیدار نے تصدیق کی کہ اسپین نے کالز اور میسجز کی سہولت فراہم کرنے والی موبائل ایپلیکیشن کمپنیز پر سروسز ٹیکس لگانے کی تیاری مکمل کرلی۔

انہوں نے کہا کہ واٹس ایپ اور دیگر آمدنی بنانے والی کمپنیز کو حکومت نے تحریری تجویز سے آگاہ کردیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہم نے ٹیلی کام سروسز فراہم کرنے والی کمپنیوں پر بھی ٹیکس عائد کرنے کا قانون تیار کرلیا ہے، اب اس معاملے پر عوام سے رائے بھی لی جائے گی اور انہیں اس مقصد کے حوالے سے آگاہ بھی کیا جائے گا۔

محکمہ ٹیلی کمیونیکیشن اور ڈیجیٹل انفراسٹریکچر کے سیکریٹری نے بتایا کہ ’ہم مسابقتی حالات کو مدنظر رکھتے ہوئے مواصلاتی خدمات کی سروسز کے استعمال کے طریقہ کار کو تبدیل کرنے جارہے ہیں‘۔

انہوں نے بتایا کہ جو کمپنیاں سالانہ 1 ملین یورو کی آمدنی کریں گی انہیں اسپین میں اپنی سروسز جاری رکھنے کے لیے ٹیکس ادا کرنا لازمی ہوگا۔ انہوں نے یہ بھی بتایا کہ ہم آئندہ ماہ اس بل کے حوالے سے عوامی سروے بھی کریں گے۔